skip to Main Content
منصورہ فضل منؔ:اک عظیم ہستی کی عظمت دیکھنا

اک عظیم ہستی کی عظمت دیکھنا
ہاجرہ جیسی بھی عورت دیکھنا
اپنے سر کو کر دیا تسلیم خم
یہ تھی مولا سے محبت دیکھنا
چلچلاتی دھوپ میں بھی دوڑتی
اس کی ممتا کی یہ شدت دیکھنا
دیکھنا معصوم کی سسکاریاں
اور صحراؤں کی وحشت دیکھنا
ایڑیاں رگڑیں تو زمزم دے دیا
میرے رب کی یوں بھی قدرت دیکھنا
کر ذبح اولاد، تھا حُکمِ خدا
اور نبی نے کی اطاعت دیکھنا
دیکھو اسماعیل گھبرایا نہیں
کیسی بچے کی شجاعت دیکھنا
پھر بنا ڈالا خدا کا مل کے گھر
قبلہء اُمت کی حُرمت دیکھنا
ہر گھڑی جو رب رحمان کے قریب
تھے خلیل اللہ خُلّت دیکھنا
کی تھی ابراہیم نے جو اک دعا
دی محمدؐ کی بشارت دیکھنا
آتشِ نمرود ٹھنڈی ہو گئی
یہ دعاؤں کی کرامت دیکھنا
صبر کا یوں دے دیا ہم کو سبق
اور سکھلا دی اطاعت دیکھنا
کیسے پیدا کر دی قربانی کی روح
منؔ مرے مولا کی حکمت دیکھا

image_printپرنٹ کریں