skip to Main Content
حضور کی ایک معصوم بچے کی دلجوئی اور شفقت

عید الفطر کے روز حضور پر نور ایدہ اللہ مسجد فضل کے احاطہ میں موجود تھے کہ عزیزم سید حارث ادریس احمد ابن مکرم سید محمد احمد نائب افسر حفاظت کو اس کی والدہ نے کہہ کر بھیجا کہ ’’جاؤحضور کو سلام کرو‘‘۔ اس بچے نے اپنی ماں کی ہدایت پر عمل تو کیا مگر معصومیت میں پیغام بھول گیا اور حضور سےفرط محبت میں کہہ دیا ۔ ’’حضور !جاؤ جا کر ماما کو سلام کرو‘‘۔ حضور اس پر بے اختیار مسکرائے اور اسلام آباد واپس جانے کے لئے تیار گاڑی میں بیٹھنے کی بجائے بچے کی والدہ کے گھر گئے ۔ دروازہ پر Bellدی اور والدہ )جو رشتہ میں حضور کی بھانجی لگتی ہے( سے کہا کہ آپ کے بیٹے نے مجھے کہا ہے ’’جاؤ جاکر ماما کو سلام کرو۔‘‘ اور میں آپ کو سلام کرنے آیا ہوں۔

image_printپرنٹ کریں